فرض نماز میں سورة فاتحہ کی اگر ایک آیت چھوٹ گئی ہے تو کیا حکم ہے ؟


سوال
فرض نماز میں سورة فاتحہ کی اگر ایک آیت چھوٹ گئی ہے تو کیا حکم ہے ؟

جواب
بسم الله الرحمن الرحيم

راجح قول کے مطابق سورہ فاتحہ کی اکثر آیتیں پڑھ لینے سے واجب ادا ہوجاتا ہے اور ایک دو آیت چھوٹنے سے سجدہٴ سہو واجب نہیں ہوتا۔
(ثم واجبات الصلاة أنواع) (منہا) قرائة الفاتحة والسورة إذا ترک الفاتحة فی الأولیین أو إحداہما یلزمہ السہو وإن قرأ أکثر الفاتحة ونسی الباقی لا سہو علیہ وإن بقی الأکثر کان علیہ السہو إماما کان أو منفردا، کذا فی فتاوی قاضی خان.[الفتاوی الہندیة 1/ 126) نیز دیکھیں : حاشیة الطحطاوی علی المراقی(ص:460،ط: اشرفی)
واللہ تعالیٰ اعلم
دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

ماخذ :دار الافتاء دار العلوم دیوبند
فتوی نمبر :170229

Leave a Reply